مرکز
1 2 3

امریکی ویزا حاصل کرنے کا عمل

امریکہ میں تعلیم حاصل کرنے والے ہندوستانیوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے مد نظراسٹوڈینٹس ویزا کے لیے درخواست دینے کے عمل کو آسان  اور جلد مکمل ہونے والا بنایا گیا ہے۔

طلبہ  ہند۔ امریکہ تعلقات کو مضبوط بنانے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں۔یہ دونوں ملکوں کے عوام کے درمیان روابط کو فروغ دینے میں بھی مدد کرتے ہیں جس سے دونوں ملکوں کو فائدہ حاصل ہوتا ہے۔اس کے علاوہ طلبہ زندگی بھر ثقافتی سفیروں کے طور پر کام کرتے ہیں۔ ۲۰۱۷ ء کی  اوپن ڈور رپورٹ ظاہر کرتی ہے کہ ہندوستانی طلبہ ملک سے باہر تعلیم حاصل کرنے کے معاملے میں امریکہ کو ترجیحی ملک کا درجہ دیتے ہیں ۔یہاں سے ایک لاکھ ۸۶ ہزار سے زائد طلبہ فی الحال امریکہ میں پڑھ رہے ہیں ۔ یہ تعداد اب تک کی سب سے بڑی تعداد ہے اور پچھلے سال کے مقابلے اس میں ۱۲ فی صد کا اضافہ ہوا ہے۔  

درخواست دینے سے پہلے کیا کریں 

امریکہ میں۴۵۰۰ تسلیم شدہ کالج اور یونیورسٹیا ں ہیں جو بہترین تعلیم اور بہت طاقتور المنائی کمیونٹی کے لیے معروف ہیں ۔ امریکی اسٹوڈینٹ ویزا کی درخواست دینے سے پہلے کسی بھی غیر ملکی طالب علم کو سب سے پہلے کسی تسلیم شدہ امریکی تعلیمی ادارے میں داخلہ لینا ضروری ہوتا ہے۔ نئی دہلی میں موجود امریکی سفارت خانہ امریکہ میں اعلیٰ تعلیمی مواقع تلاش کر رہے طلبہ کی حوصلہ افزائی کرتا ہے کہ وہ ایجوکیشن یو ایس اے سے رابطہ کریں۔ ایجوکیشن یو ایس اے امریکی وزارتِ خارجہ کا نیٹ ورک ہے جو ۴۲۵طلبہ مشاورتی مراکز پر مشتمل ہے جو ۱۷۵ سے زائد ملکوں میں پھیلے ہوئے ہیں ۔ ان میں سے ۷ مراکز انڈیا میں بھی ہیں۔ایجوکیشن یو ایس اے طلبہ کو ان کی ترجیحات کے مطابق درست امریکی تعلیمی ادارے کے انتخاب سے متعلق مفت ، درست اور جامع معلومات فراہم کرتا ہے۔  

درخواست دینے کا عمل

’’مبارک ہو!آپ کے طویل مدتی اہداف کے مطابق امریکی یونیورسٹی (یا کالج) میں آپ کی درخواست قبول کی گئی۔اب ویزا کے لیے درخواست دینے کا وقت ہے۔ ‘‘  عام طور پر ویزا کی درخواست دینے کے عمل میں یہ پہلی اطلاع ہوتی ہے۔ایسا خیال ہے کہ انڈیا میں امریکی اسٹوڈینٹ ویزا کے لیے درخواست دینا کبھی بھی آسان نہیں تھا۔مگر اس نظریہ کے برخلاف درخواست دہی کا عمل سیدھا اور آسان ہے۔ درخواست دینے والے طلبہ آن لائن فارم بھرتے ہیں ، پروسیسنگ فیس  جمع کرتے ہیں اور دو ملاقاتوں(پہلی ملاقات فنگر پرنٹس اور فوٹوگراف جمع کرنے کے لیے اور دوسری ملاقات انٹرویو کے لیے) کے لیے وقت حاصل کرتے ہیں۔ یہی تین آسان سے قدم ہیں اور یہ عمل مکمل ہو جاتا ہے۔ ویزا کی درخواست دینے والوں کے لئے ویزا حاصل کرنے سے متعلق تمام تر معلومات ہماری ویب سائٹ www.ustraveldocs.com/in پر موجود ہیں۔ 

درخواست دینے والوں کو ایسے لوگوں سے پرہیز کرنا چاہئے جو ویزا درخواست کے عمل سے متعلق یا تو غلط معلومات دیتے ہیں یا پرانی جانکاری پر اصرار کرتے ہیں۔ میرا مشورہ ہے کہ تحقیق اور مستند معلومات کے لیے ہماری ویب سائب کا جائزہ لیا جائے۔ 

دستاویزات اور انٹرویو

انٹرویو کے دن طلبہ کو اس بات کو یقینی بنانا چاہئے کہ وہ اسکول سے جاری آئی ۲۰ یا ڈی ایس ۲۰۱۹ فارم ، ایس ای وی آئی ایس کنفرمیشن پیج ، درست پاسپورٹ اور ڈی ایس ۱۶۰  انٹرویو اپوائنمنٹ لیٹر لے جائیں۔ اسٹوڈینٹ ویزا کے لیے انٹرویو کی خاطر یہی چیزیں درکار ہیں ۔ گرچہ کونسلر افسر اضافی دستاویزات طلب کر سکتا ہے مگر یہ یاد رکھنا اہم ہے کہ امریکی ویزا کے لیے درخواست کا عمل انٹرویو کی بنیا د پرمکمل ہوتا ہے۔ افسر کی باتوں کو دھیان سے سنیں اور ان کا ایمانداری کے ساتھ جواب دیں۔ طلبہ کو اپنے تعلیمی پروگرام کی وضاحت کے لیے تیار رہنا چاہئے ۔ ان سے یہ بات دریافت کی جا سکتی ہے کہ انہوں نے تعلیمی خرچ کی منصوبہ بندی کس طرح کی ہے اور گریجویشن کے بعد وہ کیا کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں۔ کونسلر افسر ہر درخواست کو ایک انفرادی معاملہ مانتا ہے اور درست پائی گئی تمام درخواستوں کو ویزا جاری کرتا ہے۔ 

مزید معلومات

ہم جانتے ہیں کہ ویزا کی درخواست کے عمل کے بارے میں طلبہ مزید سوالات کریں گے۔ہم تمام درخواست دینے والوں کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں کہ وہ انڈیا میں امریکی سفارت خانے کے ٹوئیٹر ہینڈل USAndIndia@ اور سماجی رابطے کی ویب سائٹ فیس بک پیج www.facebook.com/India.usembassy سے استفادہ کریں جہاں ہم ویزا سے متعلق معلومات اور کونسلر افسر کے ساتھ ویزا فرائیڈے کے نام سے لائیو چیٹ کرتے ہیں۔ ایجوکیشن یو ایس اے انڈیا نے اپنا نیا فیس بک پیج  www.facebook.com/EducationUSAIndia بنایاہے جس پر  امریکہ میں تعلیم حاصل کرنے کا منصوبہ بنا رہے طلبہ کے لیے مزید معلومات موجود ہیں۔ 

نئی دہلی میں موجود امریکی سفار خانہ امریکہ میں اپنے تعلیمی اہداف کو شرمندہ تعبیر کرنے کے لیے انڈیا سے امریکہ جانے کے خواہشمند طلبہ کا استقبال کرتا ہے۔ویزا جاری کرنے کے آسان عمل اور ایجوکیشن یو ایس اے کے مفت معلوماتی وسائل کے بغیر ان اہداف کو حاصل کرنا آسان نہیں تھا۔ 

نتھانیل فرار نئی دہلی کے امریکی سفارت خانے میں کونسلر افسر ہیں۔ 

 

تبصرہ کرنے کے ضوابط