مرکز
1 2 3

تجارت کے نئے محاذ

آن لائن تجارتی پیشے ور تیزی سے ارتقا پزیر انٹرنیٹ کی دنیا میں جگہ تلاش کرنے میں کمپنیوں کی مدد کرنے میں مصروف۔

انٹرنیٹ صرف تصویریں شیئر کرنے اور ویڈیو دیکھنے کا ہی ایک اچھا  وسیلہ نہیں بلکہ یہ ایک فعال نظام ہے جس میں تمام جثہ اور شکلوں کی کمپنیوں کو پوری دنیا میں اپنے گاہکوں کے ہاتھوں اپنا سامان فروخت کرنے میں مدد ملتی ہے۔ آن لائن تجارت کی تیزی سے بدلتی ہوئی دنیا میں اپنی جہت تلاش کرنا چھوٹے اور بڑے دونوں طرح کے کاروبار کے لئے ایک زبردست کام ہے اور اسی لئے اس شعبے میں زیادہ سے زیادہ لگن اور محنت سے کام کرنے والے پیشہ ور ماہرین اپنی اپنی تنظیموں کو پھولنے پھلنے میں مدد پہنچا رہے ہیں۔آن لائن مارکیٹر مخصوص مارکیٹنگ فرموں، کارپوریشنوں، غیر منافع بخش تنظیموں، تعلیمی اداروں، سیاسی مہمات اور تقریباً ہرایسی جگہ کام کرتے ہیں جہاں اپنے سامان یا خدمات کی طرف گاہکوں کو راغب کرنے کی کوشش کی جاتی ہے۔ 

آن لائن مارکیٹنگ کی دنیا

انٹر نیٹ پر اپنا سامان فروخت کرنے والی ایک فرم ’’انڈین آن لائن مارکیٹنگ‘ ‘کے بانی اور سی ای او نوین پال نے بتایا کہ ’’آن لائن مارکیٹنگ مجموعی طور پر معاشرہ کے لئے بہت اہم ہے۔یہ ایک ایسا کام ہے جو تقریباً تمام تجارتی ادارے کرتے ہیں۔‘‘آن لائن مارکیٹنگ سے کمپنیوں کو مسلسل اور کم لاگت پر نظرآنے کا موقع ملتا ہے جس میں نہ تو دن ختم ہوتے ہی دکان بند کرنے کی ضرورت پڑتی ہے نہ ہی چھٹیوں میں دکان بندرہتی ہے۔ مواد میںاضافہ کیا اوربدلابھی جاسکتا ہے۔گاہک کو یہ آسانی ہوتی ہے کہ وہ کسی تجارتی ادارے کو اور اس کے یہاں دستیاب مصنوعات یا خدما ت کو انٹرنیٹ پرتلاش کرلیں ۔ آن لائن مارکیٹنگ کی حکمت عملی کو درست ڈھنگ سے ملاکر کام کیا جائے تو فروخت بھی ڈرامائی طور پر بڑھ جاتی ہے۔پال نے بتایا کہ ’’اگر آپ کے پاس آن لائن مارکیٹنگ کی سہولت نہیں ہے اور آپ کا مقابلہ کرنے والی کمپنی کے پاس ہے تو وہ آپ سے ایک قدم آگے ہے۔ وہ زیادہ بڑی تعداد میں لوگوں تک پہنچ سکے گی اور زیادہ بڑی تعداد میں گاہک بھی حاصل کرسکے گی اس لئے آپ اپنے کاروبار کی آن لائن مارکیٹنگ شروع کردیں۔‘‘

آن لائن مارکیٹنگ منیجروں کے لئے ضروری ہے کہ وہ کامیاب ہونے کے لئے چیلنج بھری سنسنی خیز ذمہ داریاں قبول کریں۔ان ذمہ داریوں میں برانڈ کے بارے میں بیداری پیدا کرنا اور ویب سائٹ پر زیادہ لوگوں کے آنے کی صورت نکالنا اور دیگر مقاصد کے لئے آن لائن حکمت عملی وضع اور اس پر عمل کرنا ضروری ہے۔ان لوگوں پر یہ بھی لازم ہے کہ وہ ’’حقیقی دکان داری کے ماحول میں اپنی فروخت بڑھانے کے لئے سائٹ پر آنے والے گاہکوں کے برتاؤ، پیج پران کی کارکردگی، کلک کرنے کے طریقہ،اوراشتہار پر کلک کرنے کے بعد کے عمل اور خریداری کے رجحان کا تجزیہ کریں۔‘‘ اور ایسی تمام کوششوں کے ذریعہ آن لائن مارکیٹر کمپنیوں کے ایک سے زائد شعبوں کے ساتھ ، جن میں انہیں کام کرنا ہوتا ہے، قریبی ربط رکھ سکتے ہیں ، نئے اور موجودہ مصنوعات اور خدمات کو سرگرمی سے فروغ دے سکتے ہیں اور یہ کام کرتے وقت بجٹ کے اندر رہ سکتے ہیں۔

ادھر کے کئی برسوں کے دوران پال کو آن لائن مارکیٹنگ کے استعمال میں نمایاں نمو دیکھنے کو ملی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ’’اگر ہم ہندوستان کی مثال سامنے رکھیں تو یہاں انٹرنیٹ استعمال کنندگان کی تعداد بہت تیزی سے بڑھ رہی ہے۔ اس نمو سے تجارتی اداروں کو انٹرنیٹ پر اپنی مصنوعات اور خدمات کو فروع دینے کے بڑے امکانات حاصل ہورہے ہیں۔ اگلے چند برسوں میں مزید لاکھوں لوگ انٹرنیٹ سے منسلک ہو جائیں گے اور اس طرح یہ پہلے سے بڑی طاقت بن جائے گی کیونکہ زیادہ لوگ اپنی ضرورت کی چیزیں انٹرنیٹ پر تلاش کریں گے ۔‘‘

کرئیر کا انتخاب

پال کے کہنے کے مطابق آن لائن مارکیٹنگ کی دنیا میں پھولنے پھلنے کے لئے کام کا تجربہ ضروری نہیں لیکن تربیت اور تعلیم دونوں چیزیں کامیابی کی کنجیاں ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ ٹکنالوجی اور کمپیوٹر ایپلی کیشنس میں کالج کی ڈگری یا ایک ایم بی اے ڈگری کے ساتھ یہ بھی ضروری ہے کہ ویب سائٹ ڈیزائن، گرافک ڈیزائن اور سرچ انجن کو زیادہ سے زیادہ استعمال کرنے کا ہنر آتا ہو۔پال نے کہا کہ ’’ٹکنالوجی مسلسل بدلتی رہتی ہے۔ نئے آن لائن آلات آتے رہتے ہیں ۔ ہمارے لئے ضروری ہے کہ ہم چیزوں کو اصلی بنائے رکھیں اور اچھے سیکھنے والے بنیں۔‘‘ اس اصول پر عمل کرنے کا مطلب ہوا کہ گوگل اور یاہو جیسے سرچ انجنوں سے اورفیس بک ، یو ٹیوب اور ٹوئٹر جیسے سماجی میل جول کے دیو پیکر ذرائع ابلاغ سے آئے ہوئے نیوز لیٹر بھی پڑھیں۔

اپنی کمپنی کے بانی اور سی ای او ہونے کے ناطے پال زیادہ دیر تک کام کرتے ہیں۔ اکثر یہ ہوتا ہے کہ وہ ہفتے میں چھ دن کام کرتے ہیں اور ان کا ہر کام کا دن ۱۳گھنٹے کا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ’’میرے کام میں ذہنی تناؤ بہت ہے اس کے باوجود میں آن لائن مارکیٹنگ سے پیار کرتا ہوں۔‘‘جوآن لائن مارکیٹنگ منیجر دیگر تنظیموں کے لئے کام کرتے ہیں ان سے یہ امید کی جاتی ہے کہ وہ اپنے کام میں ڈھیر سارا وقت لگائیں گے۔ گو کہ یہ بھی ہوسکتا ہے کہ ان کے کام کے اوقات اتنے شدید نہ ہوں جتنے کہ پال کے ہیں۔ 

تنخواہ سے متعلق ایک ویب سائٹ کے مطابق امریکہ میں آن لائن مارکیٹنگ منیجروں کی سالانہ تنخواہ ۶۳,۰۰۰ امریکی ڈالر ہے۔ جبکہ پے اسکیل پر ان منیجروں کی تنخواہ ۳۷,۰۰۰سے ۹۰,۰۰۰ ڈالر تک بتائی جاتی ہے۔اس کام میں کتنا چیلنج ہے اور کیا تنخواہ ملتی ہے اس سے الگ ہوکر بھی دیکھیں تو پال اس سچائی پر زور دیتے ہیں کہ اسکائی پی جیسے آلات کی وجہ سے وہ امریکہ ، برطانیہ، آسٹریلیا اور کہیں سے بھی اترپردیش کے میرٹھ میں واقع اپنے ہیڈ کوارٹر سے موکلوں کے ساتھ بات کرلیتے ہیں اور اس کے لئے انہیں ملک ملک، نگر نگر کھومنا نہیں پڑتا۔ انہوں نے کہا کہ’’آ ن لائن مارکیٹنگ کی تکنیک یہی ہے۔ ہم لوگ دنیا میں کہیں بھی اپنی مصنوعات کو فروغ دے سکتے ہیں اور انہیں فروخت کرسکتے ہیں۔‘‘

مائیکل گیلنٹ ،گیلنٹ میوزک کے بانی اور چیف ایگزیکٹو افسر ہیں۔ وہ نیویارک سٹی میں رہتے ہیں۔

 

تبصرہ کرنے کے ضوابط